ناجائز تجاوزات کے خلاف آپریشن اچھا اقدام ہے، علامہ محسن کاظمی

کراچی ( نمائندہ خصوصی) العصر ویلفیئر آرگنائزیشن کے بانی و صدر علامہ سید محسن کاظمی نے کہا ہے کہ چیف جسٹس آف پاکستان کا کراچی کو اس کی پرانی حالت میں دیکھنے کا بیان نہایت ہی خوش آئند ہے اور ناجائز تجاوزات کیخلاف آپریشن بھی ایک اچھا قدم ہے، غیر قانونی تعمیرات کی وجہ سے شہر قائد کا حسن گہنا گیا، غیر قانونی تعمیرات کو روکا جائے،چھوٹے چھوٹے پلاٹوں پر بڑی بڑی بلڈنگز بنا کر عوام کو بجلی اور پانی سے محروم رکھا گیا، معلوم کرنا ہوگا کہ کون ہے جس نے نہایت کم جگہ پر بڑی بلڈنگز بنانے کی این او سی دی اور بلڈنگز بنی، شہر سے قبضہ گروپوں کا خاتمہ ہو جائے تو چیف جسٹس آف پاکستان کا شہر قائد کی تین کروڑ عوام پر احسان ہوگا، ان خیالات کا اظہار انہوں نے العصر ویلفیئر آرگنائزیشن کے مرکزی دفتر سے جاری کردہ بیان میں کیا، سید محسن کاظمی کا کہنا تھا کہ ناجائز تجاوزات کا خا تمہ کراچی کے لیئے اقدام قابل ستائش ہے ساتھ میں ہم یہ درخواست بھی کرتے ہیں کہ غریب عوام کا خیال کیا جائے، قدیم آبادیوں اور گوٹھوں میں آباد لاکھوں لوگوں کو بے گھر کرنے سے پہلے ان کو متبادل جگہ فراہم کر نی ہوگی تاکہ وہ سر چھپانے کا ٹھکانہ بنا سکیں ، انہوں نے کہا کہ سب سے پہلے ان لوگوں کے خلاف آپریشن کیا جائے اور ان لوگوں کو پکڑا جائے جو این او سی فراہم کرکہ غریب عوام کو پلاٹ فروخت کرتے رہے ، معصوم عوام کے ساتھ لوٹ مار کرتے رہے اور مال بناتے رہے ، انہوں نے کہا کہ قدیم اور پرانے گوٹھوں میں قیام پذیر لوگوں کو متبادل جگہ دینے سے پہلے ان کے گھر مسمار کرنے سے لاکھوں لوگ بے گھر ہو جائیں گے اور شہر قائد کے روڈوں اور سڑکوں پر عوام کا ایک سمند ر امڈ آئے گا جس سے ایک نئے المیہ کے جنم لینے کا خدشہ پیدا ہو سکتا ہے اور حالات بگڑنے کا بھی خطرہ ہے، ہم اپیل کرتے ہیں چیف جسٹس آف پاکستان عوام کو بے گھر ہونے سے بچایا جائے اور ان کرپٹ اور راشی افسران کے خلاف قانونی کاروائی کی جائے جن کی کرپشن کی وجہ سے غیر قانونی گھر بنے ، جنہوں نے سرکاری زمینوں پر غیر قانونی قبضہ کروائے ۔