انجمن ہلال احمر کے رضاکاران میں کورونا وائرس کی تشخیص

اسلام آباد(نمائندہ خصوصی)انجمن ہلال احمر کے رضاکاران میں کورونا وائرس کی تشخیص۔ذرائع کے مطابق ملک بھر میں عوامی خدمت گزاری کے جذبے کے تحت فلاحی سرگرمیاں انجام دینے والے رضاکارخود کورونا وائرس کا شکار ہونے لگے۔گزشتہ روز تک عوام اور دیگر عملے کے ہمراہ امدادی سرگرمیاں انجام دینےکے بعد آج کروائے گئے فرحان نامی رضاکار کی کورونا رپورٹ مثبت آگئی جس سے ادارے کے دیگر عملے میں تشویش کی لہر دوڑ گئی۔جس کے بعدیوتھ اینڈ والنٹیر ڈیپارٹمنٹ کوتین دن کیلئے سیل کردیا گیا ہے۔

جبکہ رضاکار سے رابطے میں رہنے یا ملنے والے افراد بھی وائرس سے متاثرہ ہوسکتے ہیںجس کے بعد یہ شبہ ظاہر کیا جارہا ہے کہ فلاحی کاموں میں حصہ لینے والے ہلال احمرکے رضاکار خود کورونا وائرس کے پھیلائو کا باعث بن رہے ہیں۔اس سے قبل بھی انجمن ہلال احمر ہری پور کے رضا کارخلیق عباسی میں بھی کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی تھی جوکہ 22 اپریل کو ہلال احمر کی جانب سے قائم کردہ اسپتال میں وزیراعظم کے دورہ کے وقت بھی موجود تھا۔واضح رہے کہ ہلال احمر میں اس سے قبل بھی کورونا کےمثبت کیسز سامنے آچکے ہیں جن میں حیدرآباد کے ڈاکٹر نوشاد حسین بھی شامل ہیں جو کورونا کا شکار ہوکر دم توڑ گئےجس کے اسپتال کو سیل کردیا گیا۔بعدازاں ان کی اہلیہ اور 10سالہ بیٹے میں بھی کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی جنہیں قرنطینہ منتقل کردیا گیا۔